48

کراچی (ویب ڈیسک) وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید نے کہاہے کہ میں چیلنج کرتا ہوں کہ وزیراعظم کی اسپیکر سے نہ کوئی ملاقات ہوئی ہے نہ بات ہوئی ہے، آصف زرداری والا کوئی مسئلہ نہیں ہے نیب کی حراست میں وہ گھر سے زیادہ محفوظ ہاتھوں میں ہیں، مجھے نہیں پتہ موجودہ حکومت میں شوگر مافیا کا نمائندہ کون ہے ۔ شیخ رشید کا کہنا تھا کہ میں جانتا ہوں لوگ ہم سے خوش نہیں لیکن وہ ہم سے نفرت بھی نہیں کرتے ، لوگ کرپٹ سیاستدانوں سے وصولی کرنے پر عمران خان اور تحریک انصاف کے ساتھ ہیں ۔ اگر ان سے پیسے وصول ہوجائیں تو ملک میں عمران خان کی واہ واہ ہوجائے گی۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے ایک نجی تی وی چینل کے پروگرام میں میزبان سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔ اسی پروگرام میں پیپلز پارٹی کی رہنما ناز بلوچ نے کہا کہ اس سے پہلے بھی پروڈکشن آرڈر جاری ہوتے رہے ہیں جب کہ محترمہ بینظیر کے دور میں جب رولزواضح نہیں تھے اس وقت بھی شیخ رشید کے پروڈکشن آرڈر جاری کیے گئے تھے ہم کسی انہونی چیز کی ڈیمانڈ نہیں کر رہے ہمیں افسوس ہے کہ اسپیکر ہمیں بے بس نظر آرہے ہیں۔ پروگرام میں مسلم لیگ نون کے رہنما دانیال چوہدری اور ترجمان پنجاب حکومت شہباز گل بھی شامل گفتگو رہے۔دانیال چوہدری نے کہا کہ ہم جانتے ہیں یہ سلیکٹڈ لوگ ہیں یہ جمہوری آداب کا پاس بالکل نہیں رکھیں گے، شہباز گل نے کہا کہ ہماری کوشش یہی ہے جیسے ہوتا آرہا ہے ویسے آگے نہ ہو آپ اگر کسی سیاسی کیس میں اندر ہیں تو سمجھ آتا ہے بہرحال اسپیکر کا استحقاق ہے کہ وہ کس کے پروڈکشن آرڈر ایشو کرتے ہیں کس کے نہیں کرتے اگر میری ذاتی رائے پوچھیں تو بالکل پروڈکشن آرڈر جاری نہیں ہونے چاہیں کسی بھی پارٹی کا شخص ہو جب وہ چوری کے کیس میں ہو تو نہیں ہونا چاہیے۔(

فیصل آباد (ویب ڈیسک) گورنمنٹ کالج یونیورسٹی کی انتظامیہ نے ہراسانی کی شکایت کرنے پر ازالہ کرنے کے بجائے خاتون ٹیچر کو ہی عہدے سے ہٹادیا۔ فیصل آباد کی جی سی یونیورسٹی انتظامیہ نے ہراسانی کی شکایت کرنے پر شعبہ ماس کمیونیکشن کی کوآرڈینیٹر ڈاکٹر سلمیٰ عمبر کو ہی عہدے سے برطرف کردیا،

ڈاکٹر سلمیٰ عمبر نے یونیورسٹی انتظامیہ کے فیصلے کے خلاف عدالت میں رٹ دائرکر دی۔ ڈاکٹر سلمیٰ نے رٹ میں مؤقف اختیار کرتے ہوئے کہا ڈسپلنری کمیٹی نے میرے حق میں فیصلہ دیا مگر وائس چانسلر نے مجھے ہی عہدے سے ہٹا دیا، ڈسپلن کمیٹی نے ہراسانی میں ملوث طالبعلم کو معطل کر کے یونیورسٹی میں داخلہ بند کردیا تھا۔ واضح رہے کہ ماس کمیونیکیشن ڈیپارٹمنٹ میں ایم فل کے طالبعلم وسیم نواز نے 15 مئی کو ڈاکٹر سلمیٰ عمبر کے دفتر اور برآمدے میں انہیں گالم گلوچ کیا تھا، سی سی ٹی وی فوٹیج میں طالبعلم کو جھگڑا کرتے اور ہنگامہ کرتے دیکھا جا سکتا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں