58

راجر فیڈرر دنیاکے نمبر ایک عمررسیدہ ٹینس کھلاڑی بن گئے

شہرہ آفاق سوئس اسٹار اور ریکارڈ 20 مرتبہ کے گرینڈ سلام چیمپئن راجر فیڈرر نے کہا ہے کہ دنیا کا نمبر ایک عمررسیدہ ٹینس کھلاڑی بننا دیرینہ خواب تھا۔

راجرفیڈر نے کہاہےکہ میں اسے بڑی کامیابی سمجھتا ہوں، مستقبل میں بھی کوشش ہو گی کہ عمدہ کارکردگی کے تسلسل کو برقرار رکھتے ہوئے مزید اعزازات اپنے نام کروں۔

فیڈرر نے روٹرڈیم اوپن ٹینس ٹورنامنٹ کوارٹر فائنل میں روبن ہاس کو شکست دی۔سیمی فائنل میں پہنچنے کے ساتھ ہی انہوں نے ٹینس کی عالمی درجہ بندی میں ٹاپ پوزیشن حاصل کر کے دنیا کا نمبر ایک عمررسیدہ کھلاڑی بننے کا اعزاز حاصل کیا۔

اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ 36 برس کی عمر میں دنیا کا نمبر ایک کھلاڑی بننا میرے لئے باعث اعزاز ہے، یہ اتنا آسان نہیں جتنا لگتا ہے، بلاشبہ یہ میری بڑی کامیابی ہے اور اس سے میرا مورال مزید بلند ہوا ہے اب تمام تر توجہ ٹائٹل جیتنے پر موکوز ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں