118

بریکنگ نیوز: صرف لاہور یا پنجاب نہیں ،پورے پاکستان کے وزیراعظم عمران خان نے بلوچستان والوں کو تہلکہ خیز خوشخبری دے دی ، بڑا اعلان

کوئٹہ(ویب ڈیسک) خوشحال اور ترقی یافتہ بلوچستان کے وژن کے تحت کوئٹہ ایئرپورٹ پر مسافر طیاروں کیلئے دو جدید بورڈنگ برج نصب کیا گیا ہے۔تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان کا وژن بلوچستان کے عوام کی محرومیوں کا خاتمہ ہے، اور موجودہ حکومت کی جانب سے بلوچستان میں ترقیاتی منصوبے اسی سلسلے کی ایک کڑی ہے۔کوئٹہ ایئرپورٹ

پر امریکا سے درآمد کیے گئے بورڈنگ برجز کی تنصیب کا کام مکمل کر لیا گیا۔ بلوچستان کے حجاج کی کوئٹہ واپسی کا سلسلہ پیر سے ہوگا۔نوٹس کے مطابق کوئٹہ ائیرپورٹ پرٹیکسی وے اور پارکنگ کے وقت کپتان احتیاط برتیں۔ سول ایوی ایشن اتھارٹی کی جانب سے نوٹس بھی جاری کردیا گیا۔ بورڈنگ برج کل سے مکمل طور پر فعال ہوگا۔ خیال رہے کہ وزیراعظم عمران خان بلوچستان کے مسائل کے خاتمے پر خصوصی توجہ دے رہے ہیں، دوسری جانب وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال بھی اس بات کا اقرار کرچکے ہیں۔پاک چین اقتصادی راہداری سے حاصل ہونے والے فوائد کا بڑا حصہ بلوچستان پر بھی خرچ کیا جائے گا۔ جبکہ صوبے میں لاپتہ افراد کی بازیابی کے لیے بھی حکمت عملی زیرغور ہے۔وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے کہا ہے کہ وزیراعظم عمران خان بلوچستان کو خصوصی اہمیت دے رہے ہیں، صوبائی حکومت کی کوششوں سے وفاقی پی ایس ڈی پی میں بلوچستان کا حصہ بیس فیصد سے زیادہ ہے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنے ایک اعلیٰ سطح اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا، جام کمال کا کہنا تھا کہ وفاقی وصوبائی منصوبوں پر عملدرآمد سے بلوچستان میں ترقی کے ایک نئے دور کا آغاز ہوگا، وفاقی منصوبوں کے لئے مختص فنڈز میں اضافے کے لئے وفاقی حکومت سے رابطہ کریں گے۔اجلاس میں وفاقی پی ایس ڈی پی میں شامل بلوچستان کے نئے منصوبوں پر عملدرآمد کے آغاز اور جاری منصوبوں کی پیشرفت کاجائزہ لیا گیا۔صوبائی وزیر اطلاعات میر ظہور احمد بلیدی، ایڈیشنل چیف سیکریٹری منصوبہ بندی وترقیات عبدالرحمن بزدار، پلاننگ کمیشن، این ایچ اے کیسکو

اور ایف ڈبلیو او کے حکام کے علاوہ صوبائی سیکریٹریز اور دیگر متعلقہ حکام اجلاس میں شریک تھے۔وفاقی حکام کی جانب سے اجلاس کو قومی شاہراہوں کی تعمیر وتوسیع، بجلی اور پانی کے منصوبوں، ڈیموں کی تعمیر، ایکسپورٹ پروسیسنگ زون کے قیام، سی پیک اور گوادر کے منصوبوں کی پیشرفت کے حوالے سے بریفنگ دی گئی۔ اس موقع پر وزیراعلیٰ کا کہنا تھا کہ رواں مالی سال کا صوبائی ترقیاتی پروگرام بھی سو ارب روپے سے زائد کا ہے جس میں ہر ضلع اور ہر شعبہ کو اہمیت حاصل ہے اور صوبائی حکومت نے فیصلہ کیا ہے کہ ان منصوبوں کے پی سی ون 31جولائی تک مکمل کرکے ان پر عملدرآمد کا آغاز کردیا جائے گا، بہت سے منصوبوں کے ٹینڈر اخبارات میں آچکے ہیں اور دیگر منصوبے ٹینڈرنگ پراسس میں ہیں۔ بلوچستان عوامی پارٹی کے مرکزی صدر وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے کہا ہے کہ ریکوڈک کا فیصلہ بلوچستان خود کرے گا، کرپشن یا ہارس ٹریڈنگ پر بلوچستان کو ہمیشہ نشانے پر رکھا گیا۔ نہوں نے کوئٹہ میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہی، جام کمال کا کہنا تھا کہ بلوچستان کی ہمیشہ سے اہمیت رہی ہے۔ ۔ وزیراعلیٰ بلوچستان کا مزید کہنا تھا کہ ماضی میں جذبات میں آ کر فیصلے سے ریکوڈک پر ہرجانےکا دعویٰ کیا گیا۔ریکوڈک کا فیصلہ بلوچستان خود کرے گا، مستقبل کیلئے ریکوڈک پر وزیراعظم سے مل کر لائحہ عمل بنائیں گے، افغان امن کیلئے مہاجرین کی وطن واپسی پر بھی بات چل رہی ہے۔ بلوچستان رقبے کے لحاظ سے پاکستان کا سب سے بڑا صوبہ ہے ، اس کا رقبہ 347190 مربع کلو میٹر ہے جو پاکستان کے کل رقبے کا43.6فیصد حصہ بنتا ہے قدرتی وسائل سے مالا مال ہونے کے باوجود پسماندہ ترین صوبہ ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں