59

پنجاب پولیس اہلکار نے بزرگ خاتون سے بدتمیزی کرنے کی انتہا کر دی

لاہور (نیوزڈیسک) پنجاب پولیس اہلکار نے بدتمیزی کی انتہا کر دی۔بزرگ خاتون سے بدتمیزی کرنے والے پولیس اہلکار کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہو گئی۔تفصیلات کے مطابق جب بھی پنجاب پولیس کا ذکر آتا ہے تو ہمارے ذہن میں پنجاب پولیس کا ایک انتہائی منفی سا خاکہ ابھرتا ہے۔جس میں رشوت ستانی ، اختیارات سے تجاوز اور شہریوں سے

بدتمیزی نمایاں نظر آتی ہے۔ اس وجہ سے پنجاب پولیس کے حوالے سے عوام میں انتہائی منفی تاثرات پائے جاتے ہیں اور عوام پولیس کو اپنا محافظ سمجھنے کی بجائے اس سے کترانے لگتی ہے تاہم اب پنجاب پولیس نے اخلاقیات کی تمام حدیں پار کر ڈالی ہیں۔ ‏سی پی او آفس لاہور کے باہر ایک پولیس والے نے ضعیف العمر بزرگ خاتون کے ساتھ ہتک آمیز رویہ اپنایا جس کی ویڈیو بھی سامنے آئی ہے۔ ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ پولیس اہلکار بزرگ خاتون کی چھڑی بھی اُٹھا کر پھینکتا ہے۔پولیس اہلکار کو بزرگ خاتون کے لیے غیر اخلاقی زبان استعمال کرتے ہوئے بھی دیکھا گیا۔ سوشل میڈیا پر ویڈیو وائرل ہونے کے بعد صارفین کی طرف سے بھی پنجاب پولیس پر سخت تنقید کی گئی اور مذکورہ پولیس اہلکار کے خلاف سخت ایکشن لینے کا بھی مطالبہ کیا گیا۔ جس پر اب ترجمان پنجاب حکومت کا بھی موقف سامنے آیا ہے۔ترجمان پنجاب حکومت ڈاکٹر شہباز گل نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر ٹویٹ کرتے ہوئے کہا ہے کہ وزیراعلی آفس نے لاہور پولیس کو اِس اہلکار کے خلاف فوری کاروئی کرنے کی ہدایت کی ہے. ایسے رویے کسی صورت برادشت نہیں کیے جائیں

گے. ۔شپباز گل نے ایک اور ٹویٹ کیا ہے جس میں انہوں نے بتایا ہے کہ مذکورہ پولیس اہلکار کو معطل کر دیا گیا ہے۔ خیال رہے کہ بزرگ خاتون سی پی او آفس شکایت لے کر آئی تھیں جہاں پولیس اہلکار آصف نے ان کے ساتھ ناروا سلوک کیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں