90

وقت کیا سے کیا بنا دیتا ہے۔۔۔ انتقال کے بعد ’ عابد علی‘ کے ساتھ کیا سلوک ہوگیا؟ لیجنڈری اداکار کی بیٹی ’ رحمہ ‘ نے روتے ہوئے ایسا پیغام جاری کر دیا کہ پورا پاکستان افسردہ ہوگیا

کراچی (ویب ڈیسک ) گزشتہ روز اداکار عابد علی کراچی کے ایک ہسپتال میں انتقال کر گئے تھے ۔ عابد علی کئی سالو ں سے دل کے عارضے میں مبتلا تھے اور گزشتہ دو ماہ سےہسپتال میں زیر علاج تھے ۔ اداکار عابدعلی کے انتقال پر شوبز انڈسٹری میں سوگ پایا گیا ۔ پاکستان ٹیلی ویژن کے کلاسیک عہد میں وارث جیسے ڈرامے سے شہرت حاصل کرنے والے معروف اداکار عابد کی عمر 67 سال تھی۔

مرحوم اداکار عابد علی کی بیٹی رحمہ علی باپ کی موت پر انتہائی دکھی دکھائی دیں ۔ انھوں نے ہسپتال سے ہی ایک ویڈیو پیغام جاری کیا جس میں انھوں نے اپنی سوتیلی ماں پر بدسلوکی کا الزام لگایا اور باپ کی لاش کو اپنے ساتھ لے جانے کی شدید مذمت کی ۔ انھوں نے ہسپتال سے جاری کیے گئے ایک ویڈیو پیغام میں کہا کہ ” میں آپ سب کو ایک حقیقت بتانا چاہتی ہوں ، پاپا کی دوسری بیوی رابعہ نورین ، انکی باڈی (لاش ) لیکرہسپتال سے چلی گئی ہیں ۔یہاں ہسپتال میں ، میں ، میری ماں ، میری پھوپھی اور پھوپھا موجود ہیں اور ہمیں کسی نے بھی باپ کی لاش نہیں دی ہے ۔ اب ہم یہ بھی نہیں جانتے کہ کہاں جائیں ہم لوگ ۔ ہم لوگ یہ بھی نہیں جانتے کہ وہ باپ کی لاش لیکر کہاں گئی ہیں”۔ اداکار عابد علی کی بیٹی رحمہ علی نے مزید کہا کہ” مجھے میری پھو پھو نے پیغام دیا ہے کہ ہم تمام عورتیں جن میں ، میں ، میر ی ماں اور میری پھوپھو شامل ہیں ، ہم رابعہ نورین کے گھر نہیں جاسکتی کیوں کہ رابعہ نورین نے اپنے گھر آنے سے منع کیا ہے ۔ میری سوتیلی ماں نے ہمیں جنازے کے متعلق بھی نہیں بتایا ہے کہ جنازہ کب اور کہاں ہوگا ۔ اور اب ہم لوگ یہ بھی نہی جانتے کہ ہم سب لوگ جو عابد علی کے بیٹیاں اور بہنیں ہیں کیا کریں ؟ “۔ عابد علی کی بیٹی کا مزید کیا کہنا تھا؟ ویڈیو آہ بھی دیکھیں:یاد رہےکہ اداکار عابد علی نے پہلی بیوی سے علیحدگی کے بعد معروف اداکار رابعہ نورین سے شادی کر لی تھی ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں